چھینک آنے پر شکر ادا کرنے کی تعلیم

چھینک آنے پر شکر ادا کرنے کی تعلیم


عَنْ أَبِیْ هُرَیْرَةَ قَالَ قَالَ رَسُوْلُ اللّٰهِ صَلَّی اللّٰهُ عَلَیْهِ وَسَلَّمَ: لَمَّا خَلَقَ اللّٰهُ آدَمَ وَنَفَخَ فِیْهِ الرُّوحَ عَطَسَ، فَقَالَ الْحَمْدُ لِلّٰهِ فَحَمِدَ اللّٰهَ بِإِذْنِهِ فَقَالَ لَهُ رَبُّهُ رَحِمَکَ اللّٰهُ یَا آدَمُ۔(ترمذی، رقم ۳۳۶۸)

''ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: جب اللہ نے آدم کو پیدا کیا اور اُن میں روح پھونکی،تو انھیں چھینک آئی۔ چنانچہ انھوں نے 'الحمد للہ' کہا اور پھر اللہ کے حکم سے اُس کی تعریف کی، تو اُن کے رب نے اُن سے کہا کہ اے آدم! اللہ تجھ پر رحم کرے۔''

عَنْ أَبِیْ هُرَیْرَةَ رَضِیَ اللّٰهُ عَنْهُ عَنِ النَّبِیِّ صَلَّی اللّٰهُ عَلَیْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: إِذَا عَطَسَ أَحَدُکُمْ فَلْیَقُلْ الْحَمْدُ لِلّٰهِ وَلْیَقُلْ لَهُ أَخُوهُ أَوْ صَاحِبُهُ یَرْحَمُکَ اللّٰهُ فَإِذَا قَالَ لَهُ یَرْحَمُکَ اللّٰهُ فَلْیَقُلْ یَهْدِیکُمُ اللّٰهُ وَیُصْلِحُ بَالَکُمْ۔(بخاری، رقم ۶۲۲۴)

''ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم سے روایت کرتے ہیں کہ آپ نے فرمایا: تم میں سے کسی کوچھینک آئے تو اُسے 'الحمد للہ کہنا چاہیے اور اُس کا بھائی یاساتھی سنے تو اُسے جواب میں کہنا چاہیے: 'یرحمک اللّٰہ'۔پھر جب وہ 'یرحمک اللّٰہ' کہے تو سننے والے کو چاہیے کہ وہ کہے : اللہ تمھیں ہدایت دے اور تمھارا حال درست رکھے۔''

________




Articles by this author