حالت احرام میں موذی جانور کو مارنے کی اجازت

حالت احرام میں موذی جانور کو مارنے کی اجازت


عَنْ حَفْصَةَ قال رسول اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ خَمْسٌ من الدَّوَابِّ لَا حَرَجَ على من قَتَلَهُنَّ الْغُرَابُ وَالْحِدَأَةُ وَالْفَأْرَةُ وَالْعَقْرَبُ وَالْكَلْبُ الْعَقُورُ. (بخارى، رقم 1828)

حضرت حفصہ (رضی اللہ عنہا) سے روايت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا :پانچ جانور ایسے ہیں جنھیں حالت احرام ميں مارنے میں کوئی گناہ نہیں:کوا، چیل، چوہا، بچھو اور کاٹ کھانے والا کتا۔

عن عَائِشَةَ رضي الله عنها أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قال خَمْسٌ من الدَّوَابِّ كُلُّهُنَّ فَاسِقٌ يقتلن في الْحَرَمِ الْغُرَابُ وَالْحِدَأَةُ وَالْعَقْرَبُ وَالْفَأْرَةُ وَالْكَلْبُ الْعَقُورُ. (بخارى، رقم 1829)

حضرت عائشہ رضی اللہ عنہا سے روايت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:پانچ جانور ایسے ہیں جو سب کے سب موذی ہیں، انھیں حرم میں بھی مارا جا سکتا ہے: کوا، چیل،چوہا، بچھو اور کاٹنے والا کتا۔

عن عبدِ اللهِ بنِ عُمَرَ رضي الله عنه عن النبي صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قال خَمْسٌ لَا جُنَاحَ على من قَتَلَهُنَّ في الْحَرَمِ وَالْإِحْرَامِ الفارة وَالْعَقْرَبُ وَالْغُرَابُ وَالْحِدَأَةُ وَالْكَلْبُ الْعَقُورُ. (مسلم، رقم 2868)

حضرت عبدالله بن عمر رضى الله عنہ سے روايت ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:پانچ جانور ایسے ہیں کہ ان کو احرام کی حالت میں حرم كےاندر مارنے والے پر کوئی گناہ نہیں: چوہا، بچھو، کوا ، چیل اور کانٹے والا کتا۔

________




Articles by this author