عورت کی نماز اور اس کا محرم کے ساتھ باجماعت نماز پڑھنا

کیا عورتوں کے نماز پڑھنے کا طریقہ مختلف ہے یا وہ بالکل مردوں کی طرح نماز پڑھ سکتی ہیں؟کیا ان کے لیے قیام ، رکوع ، قعدے اور سجدے کا کوئی الگ طریقہ ہے؟

کیا عورت گھر میں اپنے محرم(والد، بھائی، شوہر یا بیٹے ) کے ساتھ کچھ پیچھے کھڑے ہو کر جماعت سے نماز پڑھ سکتی ہے؟

پڑھیے۔۔۔

بیوی کی امامت

کیا ایک شوہر اپنی بیوی کو مقتدی بنا کر نماز پڑھا سکتا ہے۔ اس صورت میں بیوی کیسے کھڑی ہوگی۔

پڑھیے۔۔۔

مشرک کے پیچھے نماز

میرا سوال یہ ہے کہ کیا موجودہ دور میں شرک کرنے والے کے پیچھے نماز پڑھی جا سکتی ہے؟ اگر پڑھی جا سکتی ہے تو قرآن کی ان آیات کا مفہوم کیا ہے جن میں ۱۸ انبیاء کا ذکر کرتے ہوئے اللہ تعالٰی نے فرمایا ہے کہ اگر ان انبیاء سے شرک سرزد ہو جاتا تو ان کے تمام اعمال ضائع ہو جاتے؟ ایک اور جگہ محمدﷺ کا خصوصاً ذکر کرتے ہوئے ان سے خطاب کیا گیا ہے کہ اگر تم نے اللہ کے ساتھ شریک ٹھہرایا تو تمھارے تمام اعمال ضائع کر دیے جائیں گے۔ اعمال میں سب سے پہلے نماز آتی ہے تو اگر کسی ایسے امام کے پیچھے نماز پڑھی جائے تو کیا مقتدی کی نماز بھی ضائع ہو جائے گی جب کہ مقتدی کو معلوم ہو کہ امام کے عقیدے میں شرک واضح ہے؟ وہ قبر پرست ہو؟

پڑھیے۔۔۔

معراج، عورت كی امامت اور پردہ

میں 'youtube' پر غامدی صاحب کو سن رہا تھا۔ ايك سوال كے جواب ميں انھوں نے كہا کہ معراج كا واقعہ اصل ميں خواب تھا۔ یہ اصل میں جسمانی سفر نہيں تھا ۔ ميرے علم ميں قرآن مجيد میں ،خاص طور پر ،سورہ نجم میں فرمایا گیا ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم وہاں گئے تھے اور انھوں نے سب کچھ دیکھا۔ وضاحت فرمائيے۔

میرا دوسرا سوال عورتوں کی امامت کے بارے میں ہے۔ غامدی صاحب کے نزدیک عورتیں مرد مقتديوں كی امام ہو سکتی ہیں۔ کیا آپ یہ نہیں سوچتے کہ جب تمام مرد اور عورتیں اکٹھے نماز پڑھ رہے ہوں ان ميں نامحرم مرد اور عورتیں بھی ہوں گے۔ ان کی نظر ایک دوسرے پر پڑے گی تو اس طرح ان کی نماز خراب ہو گی۔ اس طرح عیسائیت اور اسلام میں کیا فرق رہ گیا؟ میرا خیال یہ ہے کہ مرد اور عورتيں صرف اس صورت ميں ساتھ نماز پڑھ سكتی ہیں جب عورتيں پردے ميں ہوں ۔ ایک حدیث میں بھی یہ کہا گیا ہے کہ اگر تم دوسرے لوگوں (غير مسلموں) کی روایات پر عمل کرو گے تو ان جیسے بن جاؤ گے۔ ان کے ہاں عورتوں اور مردوں کو اکٹھے نماز پڑھنے کی اجازت ہے ۔ اسلام عورت کو اکیلے میں نماز پڑھنے کی تاکید کرتا ہے اور یہی ان کے لیے بہتر بھی ہے ۔ جمعہ کی نماز البتہ عورتوں کو بھی مسجد میں پڑھنی چاہیے لیکن مردوں سے علیحدہ-

ميرا تیسرا سوال حجاب کے بارے میں ہے۔ کیا آپ كے نزديك سر کو ڈھانپنا عورت پر فرض نہيں ہے؟ اگر انھوں نے زیورات نہ بھی پہنے ہوں پھر بھی ان کے لیے بہتر ہے کہ وہ اپنا سر ڈھانپ کر رکھیں۔ سورہ احزاب میں دئے گئے پردے کے احکام كے بارے ميں غامدی صاحب کا کہنا ہے کہ یہ صرف مدینہ کی عورتوں کے لیے ہیں کہ وہ غیر محرم مردوں سے پردہ کریں۔ کیا آپ كے نزديك قرآن کے اندر موجود ہدایات ہمیشہ کے لیے نہيں ہیں؟ میرا خیال ہے کہ اگر عورت کسی کھلی جگہ پہ ہو ں تو ظاہر ہے کہ وہاں ہر قسم کے مرد ہوتے ہیں جن میں جاہل اور گنوار بھی ہوسكتے ہیں۔ عورتوں پر فرض ہے کہ وقت اور ماحول کی مناسبت سے اپنے سر دوپٹہ وغيرہ سے ڈھانپ لیا کریں۔ یہ تین نقاط ہیں جن کے بارے میں مجھے غامدی صاحب سے اتفاق نہیں ہے۔ برائے مہربانی آپ میرے ان سوالات کے جواب ارسال کریں تا کہ عورتوں کی عزت و عصمت کے تحفظ کے لیے ان کی مدد کر سکوں۔

پڑھیے۔۔۔

کیا خواتین نماز جنازہ میں شامل ہو سکتی ہیں؟ کیا خاتون نماز جنازہ کی امامت کر سکتی ہے؟

کیا خواتین نماز جنازہ میں شامل ہو سکتی ہیں؟ کیا خاتون نماز جنازہ کی امامت کر سکتی ہے؟

پڑھیے۔۔۔