تنخواہ پر پیداوار کی زکوٰۃ کیسے؟

پیداوار کی زکوٰۃ ظاہر ہے کہ کسی پیداوار ہی پر لگتی ہے، جیسے کہ کھیت میں فصل پیداوار ہوتی ہے اور کارخانے میں کوئی مصنوعہ شے، لیکن تنخواہ جو کہ محنت کا معاوضہ ہے، اسے پیداوار کیسے کہا جا سکتا ہے؟

پڑھیے۔۔۔

تنخواہ پر زکوٰۃ کا نصاب

تنخواہ پر زکوٰۃ کا نصاب کیا ہے؟

پڑھیے۔۔۔

پینشن پر زکوٰۃ

کیا پینشن پر بھی اسی طرح پیداوار کی زکوٰۃ عائد ہو گی، جیسے تنخواہ پر زکوٰۃ عائد ہوتی ہے؟

پڑھیے۔۔۔

قدما میں تنخواہ پر زکوٰۃ کا تصور

کیا تنخواہ پر پیداوار کی زکوٰۃ کا تصور خلفاے راشدین کے دور میں پایا جاتاتھا اور کیا جمہور علما اس زکوٰۃ کے قائل ہیں؟

پڑھیے۔۔۔

خیراتی ادارے سے تنخواہ لینا

میں ایک این جی او میں جنرل منیجر ہوں۔ یہ این جی او اپنے پیش نظر کاموں کے لیے لوگوں سے زکوٰۃ، صدقات، فطرانہ، قربانی کی کھالیں وغیرہ بطور اعانت (Donations) لیتی ہے۔ کیا اس ادارے میں کام کرنے والے لوگوں کے لیے اپنی محنت کے عوض تنخواہیں اور کمیشن وغیرہ لینا جائز ہے؟

پڑھیے۔۔۔

خلافت راشدہ میں پیداوار کی زکوٰۃ

حضرت عمر رضی اللہ عنہ کے دور میں بہت سے محکمے وجود میں آ گئے تھے تو کیا انھوں نے کرایے اور معالجوں کی فیسوں پر پیداوار کی زکوٰۃ عائد کی تھی، جیسا کہ غامدی صاحب کے خیال میں یہ عائد ہونی چاہیے؟

پڑھیے۔۔۔

تنخواہ پر زکوٰۃ یا ٹیکس

کیا ایک آدمی کو اپنے مال پر زکوٰۃ بھی دینا ہو گی اور حکومت کے ٹیکس بھی دینا ہوں گے؟ نیز اگر تنخواہ پر پیداوار کی ماہانہ دس فی صد زکوٰۃ ادا کرنے کے بعد سال کے آخر میں کچھ رقم جمع ہو جاتی ہے تو کیا اس پر مال کی زکوٰۃ بھی عائد ہو گی۔

پڑھیے۔۔۔

تنخواه پر زکوۃ

میرا سوال یہ ہے کہ تنخواہ پر زکوٰۃ ہر مہینے دینی ضروری ہے یا سال میں ایک ہی بار دینا کافی ہے؟ اگر سال میں ایک ہی بار دیں گے تو کیا بارہ (١٢) ماہ کی کل تنخواہ کا حساب کر کے دینی پڑے گی یا موجودہ رقم پر ہی زکوٰۃ دینا ہو گی جتنی کہ فی الحال انسان کے پاس موجود ہو؟ مہربانی فرما کر قرآن و حدیث کی روشنی میں رہنمائی فرمائیے۔

پڑھیے۔۔۔

زکٰوۃ كا نصاب

میرا سوال یہ ہے کہ میری تنخواہ ٢٦٠٠٠ ماہانہ ہے۔ آج کے مہنگائی کے دور میں میں کتنی زکٰوۃ ادا کرنے کا پابند ہوں؟

پڑھیے۔۔۔

تنخواہ اور بچت پر زکوٰۃ

زکوٰۃ کے حساب کتاب سے متعلق میرا ایک سوال ہے: جاوید احمد غامدی صاحب نے اپنی ایک گفتگو میں فرمایا کہ تنخواہ (Salary Income) پر اڑھائی فیصد کے بجائے دس فیصد کے حساب سے زکوٰۃ ادا کرنی ہو گی۔سوال یہ ہے کہ اگر کوئی شخص اپنی تنخواہ کا دس فیصد بطورِ زکوٰۃ ادا کر دیتا ہے ، اور پھر اسی تنخواہ میں سے کچھ رقم پس انداز کرنے میں بھی کامیاب ہوجاتا ہے تو کیا اسے اس بچائی ہوئی رقم پر بھی زکوٰۃ ادا کرنی ہو گی؟ مثلاً اگر میں ایکسال میں 5,00,000 روپے کماتا ہوں اور دس فیصد کے حساب سے 50,000 روپے بطورِ زکوٰۃ ادا کر دیتا ہوں اور پھرسال بھر میں 3,00,000 خرچ کرنے کےبعد 1,50,000 بچانے میں کامیاب ہوجاتا ہوں تو کیا اگلا سال آنے پر مجھے اس بچائے ہوئے 1,50,000 پر بھی زکوٰۃ ادا کرنی ہو گی؟

پڑھیے۔۔۔