دو بار نكاح

جناب میں ایک مسئلے کے بارے میں پہلے بھی آپ سے رجوع کر چکی ہوں۔ اور آپ کی شکر گزار ہوں کہ آپ نے بروقت جواب بھیجا۔ لیکن اس سوال میں میں کچھ باتیں واضح کرنا بھول گئی، اس لیے انہیں آج واضح کر دینا چاہتی ہوں۔ وہ یہ کہ میں اور میرا منگیتر دونوں پٹھان فیملی سے تعلق رکھتے ہیں لہٰذا ہماری شادی کا جو فیصلہ ہو چکا ہے وہ اٹل ہے۔ اور نہ ہی ہمارے والدین ہمیں یہ اجازت دیں گے کہ ہم جلدی نکاح کر لیں۔ اور یہ بھی واضح ہو کہ ہم شادی سے پہلے نکاح اس لیے کرنا چاہتے ہیں کہ ہمارے درمیان جو ملاقاتیں ہوتی ہیں وہ حلال ہو سکیں۔ اور وہ گناہ کے شمارے میں نہ آئیں۔ اس لیے برائے مہربانی رہنمائی فرمائیے کہ دو بار نکاح کرنے کے بارے میں اسلام کیا کہتا ہے؟

پڑھیے۔۔۔