زنا کے مرتکب شخص کے ساتھ شادی

ایک مسلمان لڑ کی کے لیے ایک ایسے مسلمان مرد کا رشتہ آیا ہے جو اپنے منہ سے اعتراف کرتا ہے کہ وہ ماضی میں شراب پیتا رہا ہے اور اُس نے کئی مرتبہ غلط قسم کی لڑ کیوں سے جنسی تعلقات قائم کیے ہیں ، لیکن اب وہ شادی کرنا اور صاف ستھری زندگی گزارنا چاہتا ہے اور ا س کا ارادہ ہے کہ آئندہ وہ ماضی کی برائیوں سے دور رہے گا۔ اِس صورت میں کیا لڑ کی کو یہ رشتہ قبول کر لینا چاہیے یا اسلام نے ایسے شخص سے ایک مسلمان لڑ کی کا رشتہ ممنوع ٹھرایا ہے؟

پڑھیے۔۔۔