علم نجوم کی حقیقت

علم نجوم کے بارے میں آپ کی کیا رائے ہے؟

پڑھیے۔۔۔

Astrology

In some TV channels some astrologers offer predictions about the life and future of the people contacting them on the phone. They ask the callers to reveal their full name and date and place of birth. Then they claim to use this information to infer knowledge of the future of the callers. If they find that the future life of the caller is insecure they advise the latter to make it secure by the help of parituclaru Qur’anic verses. I wanted to learn whether this practice is inline with the Islamic teachings? Can a Muslim believe in these things?

Read More

علم نجوم کی حقیقت

علم نجوم کے بارے میں آپ کی کیا رائے ہے؟

پڑھیے۔۔۔

اسلام میں علم نجوم ، دست شناسی اور علم الاعداد کی حیثیت

اسلام میں علم نجوم،دست شناسی اور علم الاعداد کی کیا حیثیت ہے؟کیا خطرات سے بچنے کے لیے ان علوم کو استعمال کیا جا سکتا ہے؟

پڑھیے۔۔۔

علم نجوم

علم نجوم (ستاروں کے علم)سے قسمت کا حال معلوم کرنا اسلام میں کیوں جائز نہیں؟ جبکہ آج کل اسے ایک سائنس ہی سمجھا جاتا ہے، اگر موسم کا حال جاننا جائز ہے تو علم نجوم سے اپنا حال معلوم کرنا کیوں جائزنہیں؟

پڑھیے۔۔۔

غیب دانی

علم نجوم جس کے مختلف نام رائج ہیں،جیسے دست شناسی، علم الاعداد، فال گیری وغیرہ اپنی تمام اقسام کے ساتھ اسلام میں کیوں ممنوع ہے؟ مجھے معلوم ہے کہ ایک حدیث میں اس سے منع کیا گیا ہے۔ اس فن کے جاننے والے جب پیشین گوئی کرتے ہیں تو کہتے ہیں کہ اللہ بہتر جانتا ہے۔ ان کے نزدیک یہ ایک سائنس ہے۔ آخر اسے موسم کی پیشین گوئی کی طرح لینے میں کیا حرج ہے؟

پڑھیے۔۔۔

علمِ نجوم سے استفادہ

کسی نجومی سے مشورہ کرنے میں کیا حرج ہے۔ یہ اسی طرح کی پیشین گوئی ہے ،جس طرح طوفان ، زلزلے اور بارش وغیرہ کی پیشین گوئی کی جاتی ہے۔میرا ایک ذاتی تجربہ ہے۔ مجھے کسی نجومی نے بتایا تھا کہ فلاں وقت ملک سے باہر جانے کا امکان ہے، ایسا ہی ہوا۔ مجھے فائدہ یہ ہوا کہ میں نے اس کے لیے مناسب تیاری کر رکھی تھی۔ اگر نجومیوں سے اس نوع کا فائدہ اٹھایا جائے تو اس میں کیا حرج ہے؟

پڑھیے۔۔۔

دست شناسی (پامسٹری)

میراسوال یہ ہے کہ کسی کا ہاتھ دیکھ کر اس کے مستقبل کے بارے میں بتانا حلال ہے یا حرام؟ میں نے سنا ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے اس سے روکا ہے اور فرمایا ہے کہ جو ایسا کرتا ہے اس کی 40 دن کی مقبول نمازیں ضائع ہو جاتی ہیں۔ کیا یہ حدیث درست ہے ؟ اور کیا آپ نے اس طرح کی اور دوسری صورتوں کو جیسے جادو یا کاہن وغیرہ کے حوالے سے بھی حرام قرار دیا ہے ؟ جب کہ آجکل کے دور میں تو پامسٹری ایک باقاعدہ سائنس بن گئی ہے تو کیا جس طرح ہم آج موسم کے بارے میں بہت سی باتیں پہلے سے معلوم کر لیتے ہیں مثلاً یہ کہ بارش ہو گی یا نہیں وغیرہ تو اسی طرح کسی کے مستقبل کے بارے میں بھی معلوم کر لینا کیا ایک سائنٹفک تکنیک کے استعمال میں شمار نہیں ہو گا؟

پڑھیے۔۔۔