Why Was The Sunnah Not Protected?

assalaam-oalaykum

We learn that the Qur’ān and the Sunnah form part of the religion. We are told that God has promised to protect the “dhikr” (which I suppose includes both). Then why Allah did not protect the complete Sunnah. Hope you will help in this regards.

Thank you

Read More

کاغذ پر قرآن کیوں نہیں لکھا گیا؟

کہتے ہیں کہ قرآن سے پہلے بھی تورات اور انجیل وغیرہ کتابی شکل میں موجود تھیں۔ اگر کاغذ ایجاد ہو چکا تھا تو پھر قرآن کیوں کھجور کے پتوں اور پتھروں وغیرہ پر لکھا جاتا تھا؟

پڑھیے۔۔۔

ترتيب و جمع قرآن کے متعلق قرآن كا بيان

فتعلی الله الملك الحق ولا تعجل بالقرآن من قبل أن يقضی اليك وحيه وقل رب زدنی علما

پس اللہ بادشاہ حقیقی بہت برتر ہے۔ تم قرآن کے لیے، اپنی طرف اس کی وحی پوری کیے جانے سے پہلے، جلدی نہ کرو اور دعا کرتے رہو کہ اے میرے رب میرے علم میں افزونی فرما۔


اس جامع آیت کے حوالے سے میں اس بات پر یقین رکھتا ہوں کہ علوم میں کوئی آدمی کامل نہیں ہوتا۔ یہی رائے رکھتے ہوئے میں کسی سے سوال کرتا ہوں۔


میں جاوید احمد غامدی صاحب سے جمع قرآن کے بارے میں سوال کرنا چاہتا ہوں۔


کیا قرآن مجید میں کوئی ایسی آیت ہے جو یہ بات بیان کرتی ہو کہ جس ترتیب سے موجودہ قرآن مجید ہے اسی ترتیب سے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے زمانے میں بھی مدون ہوا تھا۔


مزید برآں آپ ان روایات پر بھی اپنی قیمتی رائے سے مستفیض فرمائیں جو قرآن مجید کے دو طرح سے مرتب ہونے کو بیان کرتی ہیں۔ایک حضرت ابو بکر رضی اللہ عنہ کی مقرر کردہ کمیٹی کی ترتیب جس پر اب یہ قرآن مروج ہے۔ دوسرے حضرت علی رضی اللہ عنہ کی ترتیب جس میں انھوں نے زمانہ نزول کے حوالے سے تاریخی ترتیب سے قرآن مرتب کیا تھا۔
اب جب میں قرآن مجید سے استفادہ کرتا ہوں تو مجھے نزولی ترتیب کی معلومات بہت مفید لگتی ہیں۔ اس سے واضح ہو جاتا ہے کہ کسی حکم فلاں موقع پر نازل ہونے کی حکمت کیا تھی اور اس میں تدریج کے کیا پہلو پیش نظر تھے۔

پڑھیے۔۔۔

مطالعۂ تاریخِ تدوینِ قرآن

میں قرآن کی تدوین کی تاریخ کا مطالعہ کرنا چاہتی ہوں ۔ کیا آپ اس سلسلے میں قابلِ مطالعہ کتابوں کے بارے میں بتا سکتے ہیں ؟

پڑھیے۔۔۔

حفاظتِ قرآن کا خدائی وعدہ اور حدبث رجم

میرا آپ سے یہ سوال ہے کہ قرآن حکیم اللہ کی طرف سے نازل کی ہوئی کتاب ہے ، جب کہ حفاظت کی ذمہ داری بھی اللہ تعالیٰ نے خود لی ہے ’’انا نحن نزلنا الذکر وانا لہ لحافظون۔‘‘ نبوت کو بھی محمد صلی اللہ علیہ وسلم پر اس لیے ختم کیا گیا کہ قرآن کو محفوظ بنایا گیا ہے ، اب نبوت کی کوئی گنجايش نہیں ہے ۔ لیکن دیکھا جائے تو ’’ہماری کتب احادیث ‘‘ کے مطابق قرآن کے محفوظ ہونے کا اللہ کا وعدہ پورا نہیں ہو رہا۔ بخاری شریف میں حضرت عمر رضی اللہ عنہ سے روایت کی گئی ہے کہ ’’رجم‘‘ کی آیت قرآن میں موجود تھی ، ہم اس پر عمل کرتے تھے۔اس کے علاوہ ابن ماجہ میں بی بی عائشہ رضی اللہ عنہا سے راویت کی گئی ہے کہ ’’رضاعت کبیر‘‘ کی قرآنی آیت تھی جو رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کی پریشانی میں میرے سرہانے رکھی ہوئی تھی جس کو بکری کھا گئی۔ اگر یہ دونوں باتیں صحیح مانی جائیں تو قرآنِ محفوظ کا تصور نہیں رہتا اورمحترم امین احسن اصلاحی صاحب نے بھی لکھا ہے کہ۔ ’’رجم ‘‘کی سزا قرآن میں نہیں ہے۔ لہٰذا یہ روایت درست نہیں ‘‘ ۔ امید ہے کہ مفصل جواب دیکر وضاحت فرمائیں گے۔

پڑھیے۔۔۔