The Obligation To Perform Hajj

I apply for hajj and my application is not approved for certain reasons. My name does not come out in the ballot. People tend to say that “you have not got a call from God.” My question is this: Is this true? If it is then how would you substantiate it through the Quran and Hadith?

Read More

Sustenance And Predestination

What part does predestination contribute in life of mankind regarding their sustenance and other facilities?

Read More

Supplication For Safety From Destitution

I have read the following statement in a monthly journel 'ishrāq': "Allah Almighty has created this set up in a manner that every human being depends on the other human being." On the other hand, all mankind pray that they not become dependent on others. Is this prayer not reasonable?

Read More

Supplication And Predetermination

My question concerns the role of dua “supplication”. We are taught that a lot of issues such as marriage, provision and life have been predestined by Allah? Can supplication effect destiny?

Read More

Obligation To Perform Hajj

Suppose I apply for Hajj and my application is not approved for certain reasons or my name does not come out in the ballot. People tend to say: Allah has not called you yet. What I am asking is that is this true? And if it is then how would you substantiate it through the Quran or Ḥadīth?

Read More

خدا کا علم اور بنی نوع انسان کی آزادی

خدا جبکہ بہت مہربان ہے تو اس نے ان لوگوں کو پیدا ہی کیوں کیا جنھیں اس کے علم کے مطابق اپنی آزاد مرضی سے گناہ کر کے دوزخ میں جانا تھا؟

پڑھیے۔۔۔

اسلام میں تقدیر کا تصور

اسلام میں تقدیر، مقدراور قسمت کا کیا تصور ہے؟ بے شک ہم وہی کچھ کرتے ہیں جو ہمارے مقدر میں پہلے سے لکھا ہوتا ہے، لیکن سوال یہ ہے کہ کیا ہم اپنی تقدیر کو بدل سکتے ہیں؟

پڑھیے۔۔۔

تقدیر اور دعا

کیا ہم اپنی تقدیر دعا سے بدل سکتے ہیں۔ یا جو اللہ نے ہمارے مقدر میں لکھ دیا ہے وہی ہوگا۔اگر معاملہ یہ ہے تو پھر ہم دعا کیوں کرتے ہیں۔

 اللہ نے بہت سے فیصلے انسان پر چھوڑ دیے ہیں۔انسان جو فیصلہ کرتا ہے کیا ہم یہ کہہ سکتے ہیں کہ وہی خدا کو منظور تھا۔ایک مثال کے مطابق :اگر کوئی اپنی پسند کی شادی کرنا چاہتا ہےاور لڑکی کے گھر والے سب جانتے ہوئے بھی اس کی شادی کہیں اور کر دیں تو کیا یہ کہنا درست ہوگا کہ اللہ کی جو مرضی تھی یا جو مقدر تھا وہی ہوا۔کون ذمہ دار ہے۔ لیکن میرا خیال یہ ہے کہ یہ اللہ کا فیصلہ نہیں تھا۔ یہ تو اس کے گھر والوں نے جان بوجھ کر کیا کیونکہ اللہ نے ہمیں یہ حق دیا کہ ہم اپنی پسند کی شادی کریں۔ تو اس صورت حال میں ہمیں کیا کہنا چاہیے۔ جو خدا کی رضا، یا اس کے گھر والوں کو الزام دینا چاہیے۔

پڑھیے۔۔۔

فطرت کی طرف سے امتیازی سلوک

کسی شخص کا اپنی پیدائیش پر اختیار نھیں ھوتا،پھر کوئی کسی ارب پتی کے ھاں پیدا ھوتا ھے اور کوئی کسی فقیر کے ھاں، یہ فطرت کی طرف سے امتیازی سلوک نھیں ھے کہ کوئی منہ میں سونے کا چمچہ لے کر پیدا ھوا اور کوئی فاقوں کے جھرمٹ میں.

اگر آپ کچھ وضاحت کر دیں تو مشکور ھوں گا کہ کسی عقلی منطق کی تلاش میں ھوں اور آپ کو ھمیشہ فکری استاد سمجھا ھے.

پڑھیے۔۔۔

تقدیر اور کوشش

میرا سوال یہ ہے کہ اگر کارخانہ قدرت میں ہر کام کا واقع ہونا طے ہے تو پھر کوشش کیوں کرنی چاہیے۔ برائے مہربانی رہنمائی فرمائیے۔

پڑھیے۔۔۔

تقدير

اگر سب کچھ قرآن اور احادیت میں واضح کر دیا گیا ہے، قیامت سے پہلے یہ ہو گا، پھر تو کوشش کرنے کی ضرورت ہی نہیں ہے کیوں کہ کامیاب مسلمان ہی ہوں گے۔ وضاحت فرمائیں۔

پڑھیے۔۔۔

رزق متعین ہے یا نہیں؟

میرا سوال یہ ہے کہ کیا مخلوق کا رزق متعین ہے یا نہیں؟ برائے مہربانی وضاحت فرمائیں۔

پڑھیے۔۔۔

جوڑے آسمان پر بنتے ہیں

تقدیر مکمل طور پر لکھی ہوئی ہے۔ لوگ کہتے ہیں کہ جوڑے آسمان پر بنتے ہیں۔ اگر کسی کو میرے لیے لکھ دیا گیا ہے تو میں اس سے شادی پر مجبور ہوں۔ مجھے صرف اسے ڈھونڈنا ہے ، بلکہ نہ بھی ڈھونڈوں تو لکھا ہوا مجھے مل ہی جائے گا۔

پڑھیے۔۔۔

مقدر ، قسمت اور گناہ

مقدر کیا ہے؟ اسلام میں قسمت کا کیا تصور ہے؟ میرا عقیدہ ہے کہ اللہ ہمیں عمل کی توفیق دیتا ہے۔ ہم اس کے پلان کے مطابق متحرک ہوتے ہیں۔ جب ایک آدمی گناہ کرتا ہے تو وہ اس کے مقدر میں لکھا ہوا ہوتا ہے۔ کیا ہمیں اپنے مقدر پر قابو حاصل ہے؟

پڑھیے۔۔۔

رزق اور تقدیر

انسانی زندگی کے وہ معاملات جو معاش اور دوسری سہولتوں سے متعلق ہیں، ان میں تقدیر کا حصہ کتنا ہے؟

پڑھیے۔۔۔

تقدير كيا ہے؟

جناب میں اپنی زندگی کے مشکل ترین حالات سے گزر رہا ہوں جس کی وجہ کوئی اور نہیں بلکہ میرے اپنے والدین ہیں۔ اور اب میں ان سے نفرت کرنے لگا ہوں جتنی کہ میں نے آج تک کسی سے نہیں کی۔ میں ایک اچھی تنظیم میں کام کرتا ہوں، جو کہ ١٠٠ فیصد ذہنی اور جسمانی صحت کا مطالبہ کرتی ہے اور الحمد للہ میں اس لحاظ سے ان کے مطالبات پر پورا اترا ہوں۔ مسئلہ یہ ہے کہ میں اب دنیا میں کسی بھی لکھی ہوئی بات پر یقین نہیں کرتا۔ اور مجھے اب اس بات کا یقین بھی نہیں رہا کہ انسان جیسا عمل کرتا ہے اسے ویسا ہی اجر ملتا ہے۔ میرے خیال میں کیا ایک انسان خدا کی طرح ہر کام کرنے کی قدرت رکھتا ہے؟ میرا مطلب ہے کہ اگربالفرض آپ مجھے قتل کر دیتے ہیں تو اس قتل کی سزا آپ کو کیوں ملے جب کہ کہا جاتا ہے کہ ہر چیز خدا کی طرف سے لکھی ہوئی ہوتی ہے؟ اب آپ یہ کہہ سکتے ہیں کہ میرے مرنے کا یہی وقت مقرر تھا او ر میری موت کا وقت لکھا ہوا تھا چاہے میری موت جیسے بھی ہوئی ہو۔ لیکن کیا میرا خاندان اس شخص کی معذرت سننے کے لیے تیار ہو گا جس نے مجھے قتل کیا ہو؟ میرا خاندان ہر صورت میں مجھے قتل کرنے والے کے خلاف انتقامی کاروائی کریں گے۔

اب اگر ہر چیز خدا کی طرف سے لکھی ہوتی ہے تو خدا مجھے میرے اعمال کی سزا مجھے کیوں دے جب کہ وہ جانتا ہے کہ میری زندگی میں فلاں فلاں اعمال مجھ سے سرزد ہوں گے؟ اگر ایسا ہے، تو یہ پھر وہ خدا کہاں ہے جو کہ انسان کو ستر ماؤں سے بھی زیادہ پیار کرتا ہے جب کہ وہ میرے ہاتھوں کسی کو قتل کرواتا ہے اور پھر مجھے اس کی سزا دی جاتی ہے؟ اب اگر سب کچھ لکھا ہوا نہیں ہے اور ہم اپنی مرضی سے تمام اعمال سر انجام دے سکتے ہیں تو پھر اللہ تعالیٰ ہمارے اعمال کا حساب کیوں لے گا؟ جیسا کہ میرے والدین کو مجھ پر بھروسہ نہیں ہے اور انھوں نے ہمیشہ مجھے گمراہی میں ڈالا اور پھر جب ان کی خطا سامنے آئی تو انہوں نے کہا کہ یہ اللہ کی طرف سے لکھا ہوا تھا۔ میری زندگی ایک مشقت بنی ہوئی ہے اور نہ جانے کیوں اپنے والدین کی غلطیوں کی سزا بھی مجھے ہی مل رہی ہے۔ اور پھر وہ یہ کہتے ہیں کہ ہر چیز دعا کے ذریعے معاف کروائی جا سکتی ہے سوائے موت کے۔ اور پھر جب ہم میں دعا کر کر کے تھک جاؤں اور دعا قبول نہ ہو تو کہتے ہیں کہ تمھارے لیے خدا کے کارخانے میں بہت کچھ ہے۔ میرے خیال میں یہ کھلا تضاد ہے۔

پھر دعا کیوں ہے جب کہ خدا ہمیں وہی عطا کرتا ہے جو وہ ہمارے لیے بہتر سمجھے، یا کچھ عطا بھی نہ کرے؟ اگر انسان کچھ برا کرے تو اس کے لیے عذاب مقرر ہے۔ تو پھر برائی کرنے والے ابھی تک د نیا میں بغیر عذاب کا سامنا کیے کیوں پھر رہے ہیں ؟ جناب میں اب ایک نہایت کمزور ترین ایمان والا انسان ہوں جسے صرف مسلمان کہا جا سکتا ہے۔ جتنا میرے علم میں ہے میں نے آج تک کوئی برا عمل نہیں کیا اور نہ کسی کے ساتھ کوئی برائی کی۔ پھر بھی میں ہمیشہ خدا کی مغفرت کا طلبگار رہتا ہوں۔ پھر خدا نے میری زندگی کو اتنا پر مشقت کیوں بنایا ہے؟ جب میری دعاؤں کا کوئی جواب ہی مجھے نہیں ملتا پھر مجھے کیوں اچھا انسان بننا چاہیے؟ میرے خیال میں دنیا میں کوئی بھی انسان خدا سے محبت نہیں کرتا اور اگر جنت اور حور کا تصور اسلام سے نکال دیا جائے تو آپ دیکھیں گے کہ بہت سے علماء اور نمازی یہاں دنیا میں رہ جائیں گے؟ دنیا میں کوئی شخص میرے خیال میں ایسا نہیں جو خود غرضی سے بالکل پاک ہو۔ میرے ذہن میں اور بہت بھی بہت سے سوالات ہیں جو میں اس سوال کا جواب ملنے پر ہی عرض کروں گا۔ برائے مہربانی مجھے اپنی زندگی کو معیاری بنانے کے لیے ان مسائل سے آگاہ کر کے میری رہمائی فرمائیے۔

پڑھیے۔۔۔

ہمارے ساتھ برا کیوں ہوتا ہے ؟

میرابھائی چارپانچ سال سے ایک کمپنی میں کام کر رہا ہے مگرترقی نہیں ہو رہی ، بلکہ کافی دفعہ ہوتے ہوتے رک گئی ہے۔ میرا بھائی کسی کے ساتھ برانہیں کرتا تو اس کے ساتھ براکیوں ہوتا ہے؟ از راہِ کرم مجھے اس کاحل بتادیں؟

پڑھیے۔۔۔

اچھائی اور برائی کا خدا کی طرف سے ہونا

قرآنِ مجید میں آتا ہے کہ جو کچھ اچھائی ہے وہ میری طرف سے ہے اور جو کچھ بھی برائی ہے وہ تمہاری طرف سے ہے۔ براہِ مہربانی ا سکی وضاحت فرمادیں۔

پڑھیے۔۔۔

تقدیر اور قسمت

تقدیر سے کیا مراد ہے؟

تقدیر کا کیا مطلب ہے اور قرآن اس کے بارے میں کیا کہتا ہے ؟ہم جو اچھے یا برے کام کرتے ہیں کیا وہ پہلے سے لکھے ہوئے ہوتے ہیں ؟ اسی طرح قسمت کے بارے میں قرآن کیا کہتا ہے ؟

پڑھیے۔۔۔

Jinn and Men created for Hell?

Dear Reader,

Assalaamu alaikum. My question is regarding taqdeer. It is a subject that nurtures countless different interpretations among religious scholars, but the one I find most satisfying is that of Ghamidi sahab. He holds the opinion that man is only bound in some issues, such as where will he be born, his physical and mental abilities, his age at the time of death etc, and for the rest of the issues he is not predestined and decides his own future through his decisions in matters of morality. However, this doctrine seems to be in contradiction with Quran, Surah al A'raf [7:179]. Allah says he has "certainly created for Hell many of the jinn and mankind". Does this verse not tell us that these humans and jinn are predestined to go to hell. It seems their sole purpose was to suffer in Hell. Secondly this seems to be in contradiction to some of Allah's attributes such as the Merciful and the Beneficent. Why would a Loving and all Merciful God create some beings so that they can only suffer in Hell. I am eagerly awaiting your valuable reply.

Read More