قرآن دین کا تنہاماخذ

اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید کو ایک کامل کتاب قرار دیا ہے اور اس میں ہر چیز کو تفصیل سے بیان کر دیا گیا ہے، جیسا کہ بعض علما مختلف آیات کے حوالے سے یہ بیان کرتے ہیں۔ اگر یہ بات صحیح ہے تو پھر قرآن مجید کے ساتھ کسی اور چیز کو دین کا ماخذ بنانے کی کیا ضرورت ہے؟

پڑھیے۔۔۔

دين کا تنہا ماخذ رسول اللہ کي ذات ہے

غامدي صاحب کے اس دعوي کہ " دين کا تنہا ماخذ رسول اللہ کي ذات ہے" کي دليل قرآن و حديث ميں کہاں ہے؟

پڑھیے۔۔۔

دين کا ماخذ رسول اللہ صلي اللہ عليہ وسلم

غامدي صاحب نے اپني کتاب اصول ومبادي ميں رسول اللہ صلي اللہ عليہ وسلم کو دين کا ماخذ قرار ديا ہے جبکہ قرآن مجيد ميں کئي مقامات پر (بقرہ 2:2 ، يونس10:15 ، انعام 6:38 - 114 اور شوري 42:52) پر بيان ہوا ہے کہ دين کا ماخذ قرآن مجيد ہے۔ قرآن مجيد سے يہ بھي واضح ہے کہ قانون سازي کا حق صرف اللہ تعالي کا ہے۔ غامدي صاحب نے اس بات کي کوئي دليل نہيں دي کہ رسول اللہ صلي اللہ عليہ وسلم کيوں دين کا ماخذ ہيں؟

پڑھیے۔۔۔

حضور صلی اللہ علیہ وسلم دین کا تنہا ماخذ

آپ لوگ اکثر یہ کہتے ہیں کہ حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم دین کا تنہا ماخذ ہیں۔ اس کی دلیل کیا ہے ۔ہم نے تو یہ سنا ہے کہ دین کا ماخذ قرآن و سنت ہیں۔ نیز یہ بھی کہا جاتا ہے کہ اجماع اور قیاس بھی دین کے ماخذ ہیں۔ مہربانی کر کے تفصیل سے وضاحت کریں؟

پڑھیے۔۔۔

مآخذِ دین

مآخذِ دین (Resources of Islamic Thought) کیا ہیں؟ ان کے دلائل بھی بیان کر دیجیے؟

پڑھیے۔۔۔