Search

فجر کی سنتوں کے بعد صلوٰۃ المسجد ادا کرنا

سوال:

جواب:

مسجدمیں داخل ہونے پردورکعت نمازادا کرنے کی تاکیدبعض روایات میں ملتی ہے ۔ایک روایت اس طرح ہے:

’’ابو قتادہ سلمیؓ کا بیان ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا:تم میں سے جو شخص مسجد میں داخل ہو تواُسے چاہیے کہ بیٹھنے سے پہلے دو رکعت نماز پڑ ھ لیا کرے ‘‘۔ (بخاری، رقم433)

اس بات کی کوئی وجہ نظرنہیں آتی کہ فجر کی نمازمیں ایسانہ کیا جائے ۔ آپ نے جوبات فرمائی ہے کہ فجرکے فرض اوراس سے پہلے پڑ ھی جانے والی دونفل رکعتوں (جنھیں عام طور پر دو سنت کہا جاتا ہے ) کے درمیان کوئی نمازادانہ کی جائے ، یہ بات کسی روایت میں نہیں آئی ہے ۔روایات میں جوبات بیان کی جاتی ہے وہ یہ ہے کہ فجرکی نمازکے بعد آفتاب نکلنے تک نوافل نہ پڑ ھے جائیں۔ اس لیے ہمارے نزدیک آپ مسجدمیں آ کر دورکعت نمازپڑ ھ سکتے ہیں ۔

Rehan Ahmed Yusufi