Search

قوالی اور قرآن و سنت

سوال:

جواب:

اہل علم عام طور قوالی کو موسیقی کی آمیزش کی وجہ سے ممنوع قرار دیتے ہیں۔ ہمارے نزدیک اس میں اصل قباحت وہ شاعری ہے جو اکثر اوقات مشرکانہ کلمات، اللہ تعالیٰ کی بارگاہ میں بے ادبی اور ان بزرگوں کی مدح میں غلو پر مبنی ہوتی ہے جن کی منقبت کی جا رہی ہوتی ہے۔ کم از کم آخری چیز تو قوالیوں میں پائی ہی جاتی ہے۔ حالانکہ اس معاملے میں نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے خود اپنے بارے میں یہ فرمایا ہے:

’’سیدناعمربن خطاب رضی اللہ عنہ کہتے ہیں کہ میں نے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کویہ فرماتے ہوئے سناکہ میری تعریف میں مبالغہ نہ کروجیسے انصار نے عیسیٰ ابن مریم علیہما السلام کی تعریف میں مبالغہ کیا ، میں تواللہ کابندہ ہوں اورکچھ نہیں ، پس اس طرح کہوکہ اللہ کے بندے اور اس کے رسول۔‘‘ ، (بخاری :رقم 3261)

Rehan Ahmed Yusufi