اچھی صحت کے لیے مسنون دعائیں

سوال:

اچھی صحت کے لیے دعاؤں پر مشتمل کچھ قرآنی آیات اور احادیث بیان کر دیجیے؟


جواب:

صحت و بیماری کے حوالے سے بعض قرآنی اور ماثور دعائیں درج ذیل ہیں ۔تاہم دعا کے متعلق یہ اصولی بات سمجھ لیں کہ بندہ جب خدا کو قدر مطلق سمجھ کر، پورے اعتماد اور بھروسے کے ساتھ دعا مانگتا ہے چاہے وہ کسی بھی زبان میں رب کو پکارے ، تو اللہ تعالیٰ اس کی پکار ضرور سنتا ہے ۔دعا کا نتیجہ چاہے ہماری مرضی کے مطابق نکلے یا نہیں وہ ہمارے حق میں ضرور نکلتا ہے ۔دنیا اور آخرت کی کوئی نہ کوئی بہتری ہمیں لازماً ملتی ہے اور کسی نہ کسی برائی سے ہم بچالیے جاتے ہیں ۔ اصل چیز اللہ کو اپنا رب سمجھ کر ، معبودِ برحق جان کر، واحد کارساز سمجھ کر اور پوری تڑ پ کے ساتھ پکارنا ہے۔ اس کا نتیجہ لازمی نکلتا ہے ۔بہرحال صحت و بیماری سے متعلق قرآن میں آنے والی (پہلی دو) اور (باقی) احادیث میں بیان کردہ بعض دعائیں حسب ذیل ہیں :

رَبِّ إِنِّيْ مَسَّنِيَ الضُّرُّ وَأَنتَ أَرْحَمُ الرَّاحِمِيْنَ

اے میرے رب ، میں سخت تکلیف میں مبتلا ہوں اور تو سب سے بڑ ھ کر رحم کرنے والا ہے ۔

رَبِّ إِنِّيْ مَسَّنِيَ الشَّيْطَانُ بِنُصْبٍ وَعَذَاب

اے میرے رب ، شیطان نے مجھے سخت دکھ اور آزار میں مبتلا کر رکھا ہے ۔

اَللّٰهُمَّ عَافِنِيْ فِيْ بَدَنِيْ ، اَللّٰهُمَّ عَافِنِيْ فِيْ سَمْعِيْ ، اَللّٰهُمَّ عَافِنِيْ فِيْ بَصَرِيْ ، لَآ اِلٰهَ اِلَّآ اَنْتَ

اے اللہ!تومجھے جسمانی صحت وعافیت عطا فرما، اے اللہ!تومیری قوتِ سماعت میں عافیت وسلامتی عطافرما، اے اللہ! تو میری قوتِ بینائی میں عافیت وسلامتی عطافرماتیرے سواکوئی معبودنہیں ہے ۔

اَذْهِبِ الْبَاسَ رَبَّ النَّاسِ ، اِشْفِ وَ اَنْتَ الشَّافِيْ ، لَا شِفَاءَ اِلَّا شِفَاءُکَ ، شِفَاءً لَا يُغَادِرُ سَقَماً

دورکر دے تکلیف کواے لوگوں کے پروردگار، شفادے دے کہ توہی شفادینے والا ہے ، تیری شفا کے علاوہ کوئی شفا نہیں۔ ایسی شفا دے جو بیماری کا ہر اثر دورکر دے ۔

اَعُوْذُ بِاللّٰهِ وَقُدْرَتِهٖ مِنْ شَرِّمَآ اَجِدُ وَاُحَاذِرُ

میں اللہ اوراس کی قدرت کی پناہ لیتا ہوں ، اس تکلیف کے شرسے جومجھے ہورہی ہے اورجس سے میں ڈر رہا ہوں ۔

اللَّهُمَّ مَتِّعْنَا بِاَسْمَاعِنَا وَ اَبْصَارِنَا وَقُوَّاتِنَا اَبَدًا مَا اَبْقَيْتَنَا

اے اللہ ، ہمیں ہماری سماعت ، بینائی اور قوتوں سے تا حیات فائدہ پہنچا۔

answered by: Rehan Ahmed Yusufi

About the Author

Rehan Ahmed Yusufi


Mr Rehan Ahamd Yusufi started his career as a teacher and an educationist after obtaining Masters Degrees in Islamic Studies and Computer Technology from the Karachi University with distinction. He started his professional career by serving as a system analyst in a commercial organization. In 1997 he joined service in Saudi Arabia and later immigrated to Canada. 

Mr Rehan Ahmad Yusufi has been attached to people of learning from the beginning of his education career. In 1991, he was introduced to Mr Javed Ahmad Ghamid, a Pakistani religious scholar. After his return from Canada in 2002, Mr Yusufi joined Al-Mawrid, a Foundation for Islamic Research and Education, founded by Mr Ghamidi. Presently Mr Yusufi is an Associate Fellow at Al-Mawrid. His job responsibilities include propagation and communication of the religion as well as religious and moral instruction of people. He is heading a training center in Karachi which offers moral training and religious education to the masses.

Mr Rehan Ahamd Yusufi has very important works and booklets to his credit. The most important of his works include Maghrib sai Mashriq Tak, Urooj-o-Zawaal ka Qanoon awr Pakistan, and Wuhi Rah Guzar. He is also the Chief Editor of the Da’wah edition of the monthly Ishraq published from Karachi. The journal is also published online on its site http://www.ishraqdawah.com

Answered by this author