ابن اسحاق

سوال:

میں نے ابن اسحاق کے بارے میں جتنا پڑھا ہے اتنا ہی کنفیوز ہوا ہوں۔ کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ ایک بہتریں عالم ہے اور کچھ اس کے عقائد کو شکوک کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ شیعت کی تعلیم کا پیروکار ہے۔ آپ کا اس کے بارے میں کیا نقطہ نظر ہے؟ برائے مہربانی تفصیلی جواب عنایت فرمائیں۔


جواب:

آپ نے ابن اسحاق کے بارے میں کچھـ آراء نقل کی ہیں اور ان کے حوالے سے ہماری رائے جاننا چاہی ہے۔

یہ باتیں کسی نہ کسی حد تک ایک حقیقت رکھتی ہیں۔ ابن اسحاق جس زمانے کی شخصیت ہیں اس میں وہ شیعیت موجود نہیں تھی جس سے ہم آج واقف ہیں۔ اس زمانے میں یہ لوگ خاندان علی کی شاخ کو اقتدار کے لیے زیادہ احق سمجھتے تھے۔ امامت کا عقیدہ اور محرم کی رسومات کا اسطوری ڈھانچا اس شکل میں سامنے نہیں آیا تھا۔

باقی رہی ان کی روایات کی حیثیت تو اس پر قیل و قال ضرور موجود ہے لیکن یہی لوگ ہیں جو اس زمانے کی تاریخ کے ماخذ کی حیثیت رکھتے ہیں۔

میرے خیال میں تاریخ نگاری ایک الگ فن ہے اس میں بیانات کی صحت وعدم صحت قرائن و شوابد کی بنا پر ہی طے ہونی چاہیے اس میں محدثین کے معیار کو نافذ کرنا خلاف مصلحت ہے اور کئی پہلوؤں سے ناقابل عمل بھی ہے۔

answered by: Talib Mohsin

About the Author

Talib Mohsin


Mr Talib Mohsin was born in 1959 in the district Pakpattan of Punjab. He received elementary education in his native town. Later on he moved to Lahore and passed his matriculation from the Board of Intermediate and Secondary Education Lahore. He joined F.C College Lahore and graduated in 1981. He has his MA in Islamic Studies from the University of Punjab. He joined Mr Ghamidi to learn religious disciplines during early years of his educational career. He is one of the senior students of Mr Ghamidi form whom he learnt Arabic Grammar and major religious disciplines.

He was a major contributor in the establishment of the institutes and other organizations by Mr Ghamidi including Anṣār al-Muslimūn and Al-Mawrid. He worked in Ishrāq, a monthly Urdu journal, from the beginning. He worked as assistant editor of the journal for many years. He has been engaged in research and writing under the auspice of Al-Mawrid and has also been teaching in the Institute.

Answered by this author