خدا کا آغاز

سوال:

میں خدا کے وجود پر مضبوط اعتقاد رکھتا ہوں ، لیکن یہ خیال مجھے ہمیشہ الجھائے رکھتا ہے کہ آخر خدا کا آغاز کیا ہے؟ آپ یا تو میرے اس سوال کی وضاحت کر دیجیے یا پھر اس موضوع سے متعلق کوئی اچھی کتاب بتا دیجیے؟


جواب:

کسی شے یاچیزکامتعین آغازیا اس کی پیدایش کاسوال اس وقت پیدا ہوتا ہے جب یہ واضح ہوجائے کہ مذکورہ شے ایک مخلوق ہے اور اسے کسی خاص وقت پرتخلیق کیا گیا ہے ۔اس کائنات کی ہرشے کے بارے میں سائنسی بنیادوں پریہ بات واضح کی جا سکتی ہے کہ وہ مخلوق ہے اور اپنا ایک متعین آغازرکھتی ہے ، لیکن اللہ تعالیٰ کے بارے میں انسان کاعلم اس قسم کافیصلہ کرنے سے قطعاًعاجزہے ۔انسان تواللہ تعالیٰ کے وجودکوبھی اپنے حواس اور ادراک کی گرفت میں نہیں لے سکتا۔یہ اللہ تعالیٰ کی عین عنایت ہے کہ اس نے ذات وصفات کا ضروری علم ہمیں عطا کر دیا ہے تاکہ ہم ظن و تخمین کی وادی سے نکل کر پورے اعتماد اور اطمینان کے اس ہستی کی عبادت کر سکیں جو ہمارا خلاق اور مالک ہے ۔

اس کے بتائے ہوئے علم میں آپ کے متعین سوال کاجواب بھی دیا گیا ہے ۔ اس نے بتایا ہے کہ ہر چیزسے پہلے اللہ خود موجود تھا (حدید57: 3)، وہ کسی تخلیقی عمل کے نتیجے میں پیدانہیں ہوا (اخلاص112: 3) اور وہ اپنی ذات میں مستقل طورپرقائم اورزندہ ہے (بقرہ2: 255)۔ اللہ تعالیٰ کی دی ہوئی اس رہنمائی کی بنیادپرہم یہ پورا اطمینان رکھتے ہیں کہ اللہ تعالیٰ ہرآغازوانجام سے بلند، تخلیق وپیدایش سے پاک اورہمیشہ زندہ و قائم رہنے والی ہستی ہیں اور جیساکہ شروع میں ہم نے اشارہ کیا ہے ، انسانی علم اس بات کوچیلنج نہیں کرسکتا اورنہ یہ بات کسی اعتبارسے خلاف عقل ہے ۔

answered by: Rehan Ahmed Yusufi

About the Author

Rehan Ahmed Yusufi


Mr Rehan Ahamd Yusufi started his career as a teacher and an educationist after obtaining Masters Degrees in Islamic Studies and Computer Technology from the Karachi University with distinction. He started his professional career by serving as a system analyst in a commercial organization. In 1997 he joined service in Saudi Arabia and later immigrated to Canada. 

Mr Rehan Ahmad Yusufi has been attached to people of learning from the beginning of his education career. In 1991, he was introduced to Mr Javed Ahmad Ghamid, a Pakistani religious scholar. After his return from Canada in 2002, Mr Yusufi joined Al-Mawrid, a Foundation for Islamic Research and Education, founded by Mr Ghamidi. Presently Mr Yusufi is an Associate Fellow at Al-Mawrid. His job responsibilities include propagation and communication of the religion as well as religious and moral instruction of people. He is heading a training center in Karachi which offers moral training and religious education to the masses.

Mr Rehan Ahamd Yusufi has very important works and booklets to his credit. The most important of his works include Maghrib sai Mashriq Tak, Urooj-o-Zawaal ka Qanoon awr Pakistan, and Wuhi Rah Guzar. He is also the Chief Editor of the Da’wah edition of the monthly Ishraq published from Karachi. The journal is also published online on its site http://www.ishraqdawah.com

Answered by this author