عمرہ كے دوران احرام كب باندھا جائے؟

سوال:

١۔ جناب محترم میں یہ پوچھنا چاہتا ہوں کہ عمرہ ادا کرتے ہوئے مجھے احرام کہاں سے باندھنا چاہیے۔ کیا جدہ میں اترتے ہی احرام باندھ لینا صحیح ہے؟ واضح رہے کہ میں Ivory Coast via Ethiopia. سے عمرہ ادا کرنے آ رہا ہوں۔ ٢۔ اور دوسرا عمرہ کرتے وقت مجھے احرام كب اور کہاں پہنچ کر باندهنا چاہیے؟


جواب:

امید ہے آپ بخیر ہوں گے۔ آپ کے سوال کا جواب حاضر ہے۔

آپ نے پوچھا ہے کہ کیا میں جدہ اتر کر احرام باندھ سکتا ہوں جبکہ میں آئیوری کوسٹ سے براستہ ایتھوپیا آ رہا ہوں۔ دوسرے یہ کہ دوسرے عمرے کا احرام کہاں سے باندھا جائے۔

اگر آپ عمرے کی نیت سے سفر کر رہے ہیں تو آپ کا جہاز جس میقات کے پاس سے گزرے گا آپ کو اس پر احرام باندھنا ہے۔ ممکن ہے آپ کا جہاز اہل مدینہ کی میقات ذدالحلیفہ کے پاس سے پہلے گزرے یا اہل مصر وشام کی میقات جحفہ کے پاس سے گزرے۔ عام طور پر جہاز میں یہ بات بتا دی جاتی ہے کہ عمرہ یاحج کے لیے جانے والوں کے لیے فلاں میقات سے جہاز گزرنے والا ہے۔

دوسرا عمرہ کرنے کے لیے آپ جہاں مقیم ہوں وہیں سے احرام باندھ سکتے ہیں۔بہتر یہ ہے کہ آپ ایک ہی عمرہ کریں۔

answered by: Talib Mohsin

About the Author

Talib Mohsin


Mr Talib Mohsin was born in 1959 in the district Pakpattan of Punjab. He received elementary education in his native town. Later on he moved to Lahore and passed his matriculation from the Board of Intermediate and Secondary Education Lahore. He joined F.C College Lahore and graduated in 1981. He has his MA in Islamic Studies from the University of Punjab. He joined Mr Ghamidi to learn religious disciplines during early years of his educational career. He is one of the senior students of Mr Ghamidi form whom he learnt Arabic Grammar and major religious disciplines.

He was a major contributor in the establishment of the institutes and other organizations by Mr Ghamidi including Anṣār al-Muslimūn and Al-Mawrid. He worked in Ishrāq, a monthly Urdu journal, from the beginning. He worked as assistant editor of the journal for many years. He has been engaged in research and writing under the auspice of Al-Mawrid and has also been teaching in the Institute.

Answered by this author